صحت

شراب نوشی 30 لاکھ افراد کی موت کی وجہ بن گئی

جنیوا: عالمی ادارہ صحت کا کہنا ہے کہ ہر سال دنیا بھر میں 30 لاکھ افراد الکحل کے باعث ہلاک ہو جاتے ہیں۔

عالمی ادارہ صحت (WHO) نے بڑا انکشاف کیا ہے کہ دنیا میں ہر سال لاکھوں افراد شراب نوشی کی وجہ سے جان کی بازی ہار جاتے ہیں، عالمی ادارہ صحت کی رپورٹ میں انکشاف کیا گیا ہے کہ ہر 20 میں سے 1 شخص کی ہلاکت شراب نوشی کے باعث ہوتی ہے۔

عالمی ادارہ صحت کے مطابق ہر سال دنیا بھر میں 3 ملین افراد الکحل کے کثرت سے استعمال کی وجہ سے موت کے منہ میں چلے جاتے ہیں جن میں اکثریت مردوں کی ہوتی ہے جب کہ دنیا بھر میں ہونے والی 5 فیصد بیماریوں کا سبب بھی الکحل ہی بنتی ہے۔

عالمی ادارہ صحت کے ماہرین کا کہنا ہے کہ الکحل کے عادی افراد تو اپنی جان سے جاتے ہی ہیں لیکن اُن کے اہل خانہ کو بھی انتہائی تکلیف دہ مراحل سے گزرنا پڑتا ہے۔ الکحل کے عادی افراد اہل خانہ پر تشدد کرتے ہیں، گھر میں توڑ پھوڑ کرتے ہیں اور یہاں تک کہ گھر میں چوریاں بھی کرتے ہیں جس سے اہل خانہ جسمانی، نفسیاتی، معاشی اور معاشرتی الجھنوں کا شکار ہوجاتے ہیں۔

عالمی ادارہ صحت کی رپورٹ کے مطابق ٹریفک حادثات کے 28 فیصد واقعات شراب نوشی کے باعث ہی رونما ہوتے ہیں اسی طرح 21 فیصد نظام انہضام کی خرابی اور 21 فیصد دل کے امراض کی جڑ شراب نوشی ہی ہے، جب کہ پھیپڑوں اور معدے کے کینسر، انفیکشن اور ذہنی امراض اس کے علاوہ ہیں۔

Show More

متعلقہ خبریں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close
Close