پاکستان

عدالتی فیصلے کے بعد مریم نواز نے ایسا بیان دے دیا کہ ملک میں کہرام مچ گیا

لاہور: پاکستان مسلم لیگ ن کے قائد نوازشریف کی صاحبزادی مریم نواز نے کہا ہے کہ فیصلے سے یہ ثابت ہوتا ہے کہ نوازشریف صادق بھی ہے اور امین بھی، ہم سب نوازہیں، عوام کی محبت میں گھرا ہوا نوازشریف ہے۔ انہوں نے اپنے والد اور سابق وزیراعظم نوازشریف کے خلاف احتساب عدالت کے فیصلے کے ردعمل میں کہا کہ ہم سب نوازہیں، عوام کی محبت میں گھرا ہوا نوازشریف ہے۔

انہوں نے اپنے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر میں مزید کہا کہ فیصلے سے یہ ثابت ہوتا ہے کہ نوازشریف صادق بھی ہے اور امین بھی ہیں۔ جتنے بھی فیصلے آئے۔ ان کے مرحوم والد کے ذاتی کاروبار کے حوالے سے آئے۔ اس میں بھی کچھ غلط نہ مل سکا تو مفروضوں پر سزائیں سنائی گئیں۔ انہوں نے کہا کہ آج کا فیصلہ نواز شریف کی امانت، صداقت اور دیانت پر ایک اور مہر ہے۔

مریم نواز نے کہا کہ ایک ہی شخص کو چوتھی بار سزا ،اندھے انتقام کی آخری ہچکی مگر فتح نواز شریف کی ہے۔ اللّہ کا شکرہے کہ اڑھائی سال کے طویل انتقام نما احتساب کے بعد، تین نسلیں کھنگالنے کے بعد، ایک پائی کی کرپشن، کک بیک یا کمشن ثابت نہیں ہوا۔ اسی طرح سرکاری خزانے میں بھی رتی بھر خیانت ثابت نہیں ہوئی ہے۔

 

دوسری جانب مسلم لیگ ن کے قائد نوازشریف کوفلیگ شپ ریفرنس میں بری کردیا گیا، جبکہ نوازشریف العزیزیہ ریفرنس میں 7سال کی قید بامشقت اور 25ملین ڈالر جرمانہ کی سزا سنا دی گئی ہے۔میڈیا رپورٹس کے مطابق قائدن لیگ نوازشریف کواحتساب عدالت نے العزیزیہ میں مجرم قرار دے دیا ہے۔عدالت نے نوازشریف کو العزیزیہ ریفرنس میں 7سال کی قید بامشقت اور 25ملین ڈالر جرمانہ کی سزا سنا دی گئی ہے۔

جبکہ نوازشریف کو فلیگ شپ ریفرنس میں بری کردیا گیا۔ عدالت نے نوازشریف کی جائیداد ضبطگی کا بھی حکم دیا ہے۔ عدالت نے بتایا کہ نوازشریف اپنا دفاع کرنے میں ناکام رہے۔ اسی طرح عدالت نے نوازشریف کے بیٹوں حسن اور حسین نواز کو اشتہاری ملزم قرار دے دیا ہے۔ عدالت نے دونوں بھائیوں کے دائمہ وارنٹ گرفتاری بھی جاری کردیے ہیں۔ سابق وزیراعظم نوازشریف نے العزیزیہ اور فلیگ شپ ریفرنس کا فیصلہ احتساب عدالت میں جا کرسنا۔

عدالتی فیصلے کے ساتھ قانون نافذ کرنے والے اداروں نے سابق وزیراعظم نوازشریف کو گرفتار کرلیا گیا ہے۔نوازشریف نے درخواست کی ہے کہ انہیں راولپنڈی کی بجائے لاہور منتقل کیا جائے۔ اس سے قبل مسلم لیگ ن کے قائد نوازشریف العزیزیہ ریفرنس کا فیصلہ سننے احتساب عدالت پہنچے۔ نوازشریف کے ہمراہ حمزہ شہباز بھی احتساب عدالت گئے۔ نوازشریف کی گاڑی احتساب عدالت پہنچی تو کارکنان نے ان کی گاڑی کو گھیرے میں لے لیا۔ اس موقع پر کارکنان نوازشریف کو دیکھ مشتعل ہوگئے اور نوازشریف کے حق میں نعرے بازی بھی کی۔ جبکہ پولیس کی جانب سے روکنے پر کارکنان اور پولیس میں تصادم ہوگیا ہے۔پولیس نے کارکنان کو منتشرکرنے کیلئے آنسو گیس کی شیلنگ کی۔

Show More

متعلقہ خبریں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close
Close