پاکستان

عمران حکومت ایک اور برا جھوٹ بولتے ہوئے رنگے ہاتھوں پکڑی گئی

اسلام آباد: 11فروری2018ءکو ایک انگریزی روزنامے کے حوالے سے خبر دی تھی کہ پاکستان میں برطانیہ کے ہائی کمشنر تھامس ڈریو نے کہا کہ پاکستان میں برٹش ایئرویز کی پروازیں جلد شروع ہو جائیں گی۔ ان کا کہنا تھا کہ پروازیں بند کرنے کا فیصلہ ناگزیر حالات میں کیا گیا۔ منگل کو وزیراعظم عمران خان کے معاون برائے سمندر پار پاکستانی نے اپنے ٹوئٹ میں برٹش ایئرویز پروازوں کی بحالی کے رسمی اعلان کا حوالہ دیتے ہوئے اسے آگے کی جانب بڑا قدم قرار دیا۔ ساتھ ہی انہوں نے دعویٰ کیا ”اپنی عاجزانہ حیثیت میں مدد دینے پر انہیں بڑی خوشی ہے”۔ دریں اثناءدفتر خارجہ سمیت سرکاری ذرائع نے کہا کہ پاکستان کے لئے برٹش ایئرویز پروازوں کی بحالی پاکستانی اور برطانوی حکام کے ایجنڈے پر ایک عرصے سے تھی۔

روزنامہ جنگ کے مطابق پاکستان میں برطانوی ہائی کمشنر بھی پاکستان کے لئے معاون و مددگار رہے۔ برطانوی ہائی کمیشن کے ترجمان اینڈریو کف نے رابطہ کرنے پر کہا کہ برطانوی کمپنیوں کے لئے سپورٹ کی سطح پر تبصرہ کرناہائی کمیشن کا کام نہیں ہے تاہم سفارتی ذرائع کے مطابق سابق ہائی کمشنر فلپ بارٹن کے دور میں کمیشن نے برٹش ایئرویز پروازوں کی بحالی کے مقصد پر کام شروع کردیا تھا۔ اخباری ذرائع نے بتایا کہ پاکستانی حکام سے مذاکرات کے دوران پروازوں کی بحالی کا مقصد حاصل کرنے کے لئے سنجیدہ کوششیں شروع کی گئیں۔ فلپ بارٹن نے پاکستانی حکام کو بتایا تھا کہ پاکستان مل کر کام کرنے کے لئے ایک اچھا ملک ہے۔ اپنے دور اور حتیٰ کہ اسلام آباد سے روانگی کے بعد برطانوی ہائی کمیشن نے پاک۔ برطانیہ تجارتی تعلقات میں معاونت کے لئے برٹش ایئرویز پروازوں کی بحالی کو دوران مذاکرات اہم نکتے کے طور پر رکھا۔

Show More

متعلقہ خبریں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close
Close