پاکستان

ن لیگ کے کون کون سے رہنمائوں نے این آر او مانگا ؟ حیرت انگیز انکشافات

اسلام آباد: آج قومی اجلاس کا اجلاس جاری ہے۔وزیر مملکت مراد سعید کا قومی اسمبلی سے اظہار کرتے ہوئے کہنا تھا کہ ہم توقع کر رہے تھے کہ آج ایوان میں عومی مسائل اٹھائے جائیں گے۔کیا اپوزیشن لیڈر پر کیسز ہمارے دور میں بنے تھے؟کیاصاف پانی ،ملتان میٹرو او دیگر کیسز اسینڈل نہیں؟۔مراد سعید نے کہا کہ ایوان کی رائے ہے جس نے بھی عوام کا پیسہ لوٹا اس کی جائیداد ڈی چوک پر نیلام کی جائے۔

ماضی میں ٹرمپ کی بات پر حکمران خاموش ہو جاتے تھے لیکن عمران خان نے ٹرمپ کو جواب دیا۔ اگر آپ نے حلال کمائی کی ہے تو ثبوت دیں اور بات ختم ہو جائے گی۔مراد سعید نے دعویٰ کیا کہ پاکستان مسلم لیگ ن کے 7 رہنماؤں نے ان سے این آر او مانگا ہے لیکن اب این آر او نہیں بلکہ کیسز چلیں گے۔

مراد سعید نے کہا کہ جو پہلا بندہ میرے پاس این آر او مانگنےکے لیے آیا تھا وہ ابھی بھی اس ایوان میں موجود ہے۔

انہوں نے کہا کہ ضرورت ہوئی تو میں این آر او لینے والے کا نام بھی بتاؤں گا۔خیال رہےپاکستان تحریک انصاف کی حکومت آنے کے بعد این آر او کی گونج ختم ہونے کا نام ہی نہیں لے رہی۔ کچھ روز قبل سابق وزیر اعظم نواز شریف کا احتسابعدالت میں صحافیوں سے غیر رسمی گفتگو کرتے ہوئے کہنا تھا کہ چین کے ساتھ دفاعی اور معاشی معاہدے کیے اور پاکستان کو ترقی دی پر افسوس کہ اس کے نتیجے میں جیل بھیج دیا گیا۔

۔اگر ہم نے این آر او لینا ہوتا تو لندن سے پاکستان نہ آتے۔ تاہم وزیراعظم عمران خان کی طرف سے بار بار کہا گیا کہ ان سے این آر او مانگا جا رہا ہے پر وہ کسی بھی صورت میں این آر او نہیں دیں گے۔وفاقی وزیر فواد چوہدری کا کہنا ہے کہ عمران خان حکومت چھوڑ دیں گے لیکن بلیک میل نہیں ہوں گے۔ وفاقی وزیر اطلاعات فواد چوہدری کا کہنا ہے کہ جو لوگ عمران خان کو جانتے ہیں وہ اس بات سے بخوبی واقف ہیں کہ عمران خان کبھی کسی کو این آر او نہیں دیں گے۔عمران خان اپنے لیے سیاست نہیں کرتے اور نہ ہی عمران خان نے سیاست میں اپنے بچوں کے لیے پیسے بنانے ہیں۔عمران خان تگڑے آدمی ہیں۔وہ حکومت چھوڑ دیں گے لیکن کسی بھی صورت میں بلیک میل نہیں ہوں

Show More

متعلقہ خبریں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close
Close