پاکستان

سرفراز احمد کپتان رہیں گے یا نہیں چیف سلیکٹر انضمام الحق نے اپنافیصلہ سنا دیا

لاہور: پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی )کے چیف سلیکٹر انضمام الحق کپتان سرفراز احمد کی حمایت میں سامنے آگئے ،کہتے ہیں کہ سرفراز احمد کی اب تک کی پرفارمنس بہت اچھی ہے اور ان کے علاوہ ابھی کپتانی کےلئے کوئی اور آپشن موجود نہیں ہے ۔ ایک انٹر ویو کے دوران انضمام الحق نے کہا کہ نیوز ی لینڈ کے خلاف ٹیسٹ سیریز میں اوپنرز توقعات کے مطابق پرفارمنس نہیں دے سکے تھے لیکن اب اگلی سیریز میں کھلاڑیوں کو ذمہ داری نبھانا ہوگی، انہوں نے کہا کہ ٹیم چوتھی اننگز میں دباﺅ برداشت نہیں کر پارہی ہے ۔

انضمام الحق کا مزید کہنا تھا کہ ہم جانتے ہیں کہ مصباح الحق اور یونس خان کے متبادل ملنا آسان نہیں ہے لیکن سینئر ترین بلے باز ہونے کے ناطے اب اظہر علی اور اسد شفیق کو اپنے کھیل کا معیار بڑھانا ہوگا۔

انضمام الحق نے لیگ سپنر یاسر شاہ کی پرفارمنس کی تعریف کرتے ہوئے کہا کہ ہم انہیں ون ڈے ٹیم میں بھی موقع دے سکتے ہیں ،امید ہے کہ یاسر ٹیسٹ کرکٹ میں 500 وکٹیں حاصل کرے گا، بلال آصف کے علاوہ کوئی آف سپنر نظر نہ آنے کے سوال پر ان کا کہنا تھا کہ پاکستان میں آف سپنر اب نایاب ہورہے ہیں۔

سابق ٹیسٹ کپتان کا مزید کہنا تھا کہ احسان مانی اور نجم سیٹھی کے کام کا طریقہ الگ الگ ہے، احسان مانی آئی سی سی کے صدر بھی رہ چکے ہیں اور کرکٹ کو سمجھتے ہیں، نجم سیٹھی نے کبھی ٹیم سلیکشن میں کسی قسم کی مداخلت نہیں کی اور احسان مانی بھی اس معاملے میں نیوٹرل ہیں ۔قومی ٹیم کے سلیکشن کے بارے میں سوال پر انضمام الحق کا کہنا تھا کہ سلیکشن کمیٹی کپتان کی مشاورت کے بغیر ٹیم کے بارے میںاکیلے کوئی فیصلہ نہیں لیتی اور اس معاملے پر ہیڈ کوچ مکی آرتھر سمیت سب ایک پیج پر ہی ہیں۔

جنوبی افریقہ کے خلاف شیڈول سیریز سے متعلق چیف سلیکٹر نے کہا کہ محمد عباس پہلے ٹیسٹ کےلئے دستیاب ہوں گے اور امید ہے کہ ٹیم نیوزی لینڈ کے خلاف کی گئی غلطیوں سے سیکھتے ہوئے اس سیریز میں عمدہ پرفارم کرے گی ۔ ایک سوال کے جواب میں انضمام الحق کا کہنا تھا کہ کسی بھی کھلاڑی کے لیے کپتان کا اعتماد بہت فائدہ مند ہوتا ہے، میرے کیریئر میں عمران خان نے مجھے بہت سپورٹ کیا تھا ۔

Show More

متعلقہ خبریں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close
Close