پاکستان

اسلام آباد سے اغواء ہونیوالے اعلیٰ ترین سرکاری افسر کے ساتھ افغانستان میں کیا کیا گیا ؟ استغفراللہ

کابل: اسلام آباد سے اغوا ہونے والے ایس ایس پی رورل طاہر خان کو افغانستان میں انتہائی ظالمانہ طریقے سے قتل کردیاگیا-

اب تک کی تازہ ترین تفصیلات کے مطابق ایس ایس پی طاہر خان دراوڑ کا تعلق خیبر پختونخواہ پولیس سے تھا۔اور وہ کچھ روز قبل سرکاری دورے پر اسلام آباد آئے تھے اور لاپعتہ ہو گئے اسلام آباد پولیس نے اُن کو ڈھوندنے سے سیکڑوں آپریشن کیے لیکن ان کا کچھ پعتہ نا لگایا جا سکا-

جب پاکستان میں اُن کا کوئی سراغ نہ ملا تو تفتیش کا دائرہ وسیع کر لیا گیا لیکن پولیس ایس ایس پی کو ڈھونڈنے میں ناکام رہی-

اب تک کے ذرائع کے مطابق ایس ایس پی رورل طاہر خان خٹک کو قتل کر دیا گیا ہے۔ذرائع کا مزید کہنا ہے کہ ایس ایس پی طاہر خان درواڑ کو افغانستان میں قتل کیا گیا ہے اور اطلاعات کے مطابق انکو اغوا کر کے افغانستان لے جایا گیا تھا جہاں انکو صوبے ننگرہار میں قتل کیا گیا۔

جب پاکستانی حکام کو اس متعلق بتایا گیا تو پاکستان نے افغان حکام سے رابطہ کرلیا ہے اور امید ظاہر کی جارہی ہے کہ لاش کو جلد از جلد پاکستان لایا جائے گا-

Show More

متعلقہ خبریں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close
Close