سائنس/ٹیکنالوجی

چین نے دنیا کا پہلا فولڈنگ اسمارٹ فون پیش کرکے دنیا کو حیران کردیا

بیجنگ: چین کی ایک غیرمعروف کمپنی نے اگلے ماہ کے آخر میں دنیا کو حیران کر دینے والا پہلا ا فولڈنگ اسکرین اسمارٹ فون فروخت کرنے کا اعلان کرتے ہوئے دنیا کے ماہرین کو حیران کر دیا-

چینی کمپنی رویول نے اپنے بل پر لچک دار ڈسپلے والی ایمولیڈ ٹیکنالوجی شائع کی ہے جسے دیکھ کر دنیا کے بڑے بڑے ماہرین کی آنکھیں دنگ رہ گئی ہیں-

اس موبائل کو اس طرح ڈیزائن کیا گیا ہے کہ یہ ایک ہی وقت میں فون بھی ہے اور ٹیبلیٹ بھی اور ھل جانے کے بعد اسمارٹ فون کا اسکرین 7.8 انچ اسکرین تک پہنچتا ہے، اور اس کے ڈسپلے کو اس طرح ڈیزائن کیا گیا ہے کہ
اگر اس کو لاکھوں دفعہ بھی فولڈ کیا جائے تو اس کی سکرین پر کوئی اثر نہیں پڑتا-

اس حیرت انگیز موبائل کی ریم جی بی ہے جبکہ 128 سے 256 جی بی تک اسٹوریج کی گنجائش ہے۔فون میں کوالکوم نیکسٹ جنریشن اسنیپ ڈریگن 8 سیریز ایس او سی پروسیسر لگایا گیا ہے۔

ڈوئیل کیمرے میں 20 میگا پکسل کیمرا ٹیلی فوٹو سینسر کے ساتھ اور 16 ایم پی وائڈ اینگل کیمرا نصب ہے-نئے فون کے آپریٹنگ سسٹم کو واٹر او ایس کا نام دیا گیا ہے جو اینڈروئڈ نائن پائی کے متبادل ہے۔

سام سنگ، آئی فون اور دیگر بڑی کمپنیاں بہت حیران ہیں اور وہ بھی ایک لمبے عرصے سے اس پر کام کر رہی ہیں لیکن ناکام رہی ہیں-

Show More

متعلقہ خبریں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close
Close