پاکستان

لاہور ہائی کورٹ نے خواجہ سعد رفیق اور سلمان رفیق کے متعلق بڑا فیصلہ سنا دیا

لاہور ہائی کورٹ نے بڑ فیصلہ سنتے ہوئے نیب کو حکم جاری کیا ہے کہ خواجہ سعد رفیق اور سلمان رفیق کو گرفتار نہ کیا جائے-

خواجہ بردران کی وکلا نے موقف اختیار کیا کہ نیب انہیں ہراساں کررہی ہے اور گرفتار کرناچاہتی ہے، ان پر جو الزامات ہیں اس سے متعلق نیب میں تمام ریکارڈ فراہم کردیا ہے۔

درخواست گزاروں کے وکیل امجد پرویز نے کہاکہ نیب نے ایک وطیرہ بنالیا ہے، سیاستدانوں کو انکوائری کے بہانے بلاکر انہیں گرفتار کرلیا جاتا ہے لہٰذا درخواست گزاروں پر کوئی ایسا الزام نہیں جس سے گرفتاری کا جواز پیدا ہو

درخواست میں مزید کہا گیا کہ نہیں صفائی کا موقع دینے کے بنیادی حق سے محروم نہ کیا جائے اور عدالت قبل از وقت گرفتاری ضمانت منظور کرے۔

امجد پرویز نے مزید مؤقف اپنایا کہ نیب سے مکمل تعاون کررہے ہیں، نیب نے 16 اکتوبر کو طلب کیا ہے اور خدشہ ہےکہ مؤقف سنے بغیر گرفتار کرلیا جائے گا۔

عدالت نے درخواست گزاروں کا مؤقف سننے کے بعد ان کی ضمانت قبل از وقت گرفتاری منظور کرتے ہوئے نیب کو 24 اکتوبر تک ممکنہ گرفتاری سے روک دیا۔

Show More

متعلقہ خبریں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close
Close